24  فروری‬‮  2018
تازہ ترین

آف لائن ویڈیوز اینڈشئیرنگ۔۔۔یو ٹیوب نے صارفین کو رواں سال کی سب سے بڑی خوشخبری سنا دی

آف لائن ویڈیوز اینڈشئیرنگ۔۔۔یو ٹیوب نے صارفین کو رواں سال کی سب سے بڑی خوشخبری سنا دی
آف لائن ویڈیوز اینڈشئیرنگ۔۔۔یو ٹیوب نے صارفین کو رواں سال کی سب سے بڑی خوشخبری سنا دی
نیویارک(ویب ڈیسک) انٹرنیٹ کی معروف ویڈیو شیئرنگ ویب سائٹ یوٹیوب نے 130 ممالک کے لیے آف لائن ایپ متعارف کروادی جس کے بعد اب صارفین بغیر انٹرنیٹ کے بغیر بھی ویڈیوز دیکھ سکیں گے۔تفصیلات کے مطابق انٹرنیٹ صارفین کی خاصی بڑی تعداد ویڈیوز تلاش یا شیئر کرنے کے لیے یوٹیوب ویب سائٹ کا سہارا لیتی ہے،
ویڈیو شیئرنگ ویب سائٹ استعمال کرنے والے صارفین کا شکوہ تھا کہ وہ موبائل انٹرنیٹ کی سست روی کے باعث ویڈیوز ٹھیک سے نہیں دیکھ سکتے۔اسی بات کو مدنظر رکھتے ہوئے یوٹیوب نے اینڈرائیڈ صارفین کے لیے آف لائن ایپ تیار کی جسے گزشتہ برس مخصوص ممالک میں آزمائشی طور پر متعارف کروایا گیا تھا تاہم اب یہ سروس 130 ممالک کے صارفین استعمال کرسکیں گے۔یوٹیوب گو نامی سروس صارفین کے موبائل ڈیٹا کو محفوظ بنائے گی اور وہ سست یا بغیر انٹرنیٹ کے بھی ویڈیوز دیکھ سکیں گے، کمپنی کی جانب سے مخصوص صارفین کے لیے ماہانہ 10 ڈالر فیس بھی مقرر کی گئی ہے۔اس سروس کے بعد یوٹیوب صارفین آف لائن ویڈیو کو نہ صرف محفوظ بناسکیں گے بلکہ اپنی مطلوبہ ویڈیو کو سرچ کرتے ہوئے اسے دوستوں کے ساتھ بھی شیئر کرسکیں گے۔کمپنی کا کہنا ہے کہ اس ایپ

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

کو متعارف کروانے کا مقصد صارفین کو آف لائن ویڈیو دیکھنے کی سہولت فراہم کرنا اور دیگر ویڈیو شیئرنگ ویب سائٹس سے سخت مقابلہ کرنا ہے۔دوسری جانب ضائی سفر کے دوران ایک پریشان کن مرحلہ پرواز کی تاخیر کا ہوتا ہے یا ایئرپورٹ پر انتظار کرنے والے افراد اس وقت اضطراب میں مبتلا ہوجاتے ہیں جب اچانک پرواز کی تاخیرکا اعلان کردیا جائے۔گوگل فلائٹ اپیلی کیشن نے حال ہی

میں ایسی اپ ڈیٹس کی ہیں جس کے ذریعے پرواز کے تاخیرکی پیشگی اطلاع صارف کوحاصل ہوجائے گی، گوگل پرواز کی سابقہ تاریخ کو مدنظر رکھتے ہوئے، موسم کی خرابی یا تاخیر کی کسی بھی وجوہات کا پتہ لگا کر صارف کو پیشگی اطلاع کرے گا کہ مذکورہ پرواز تاخیر کا شکار ہوسکتی ہے۔گوگل نے مسلسل فضائی سفر کرنے والوں کی مدد کے لیے بہت سے نئے فیچرز متعارف کرائے ہیں جس میں سے ایک مصنوعی انٹیلی جنس کا ہے جو خودکار انداز میں فلائٹ کی تاخیر کی پیشگی اطلاع ازخود صارف کو دے گا۔اگر کوئی صارف یہ جاننا چاہتا ہے کہ اس کی متعلقہ فلائٹ مقررہ وقت پر اڑان بھرے گی یا اپنی منزل پر پہنچے گی تو وہ مذکورہ فلائٹ کی تفصیلات ایپ میں ڈال کر یہ جان لے گا کہ یہ فلائٹ بروقت اڑان یا لینڈ کرے گی یا پھر اس میں تاخیر ہوگی۔گوگل فلائٹ ایپ مذکورہ پرواز کی دستیاب فلائٹ ہسٹری سے حساب کتاب لگانا شروع کردے گا ،حساب کتاب کے بعد اگر 80فیصدیقین ہوگیا کہ یہ فلائٹ دیر سے پہنچے گی تو صارف کو مطلع کردیا جائے گا۔خیال رہے کہ فضائی سفر کے دوران ایک پریشان کن مرحلہ پرواز کی تاخیر کا ہوتا ہے یا ایئرپورٹ پر انتظار کرنے والے افراد اس وقت اضطراب میں مبتلا ہوجاتے ہیں جب اچانک پرواز کی تاخیرکا اعلان کردیا جائے۔گوگل فلائٹ اپیلی کیشن نے حال ہی میں ایسی اپ ڈیٹس کی ہیں جس کے ذریعے پرواز کے تاخیرکی پیشگی اطلاع صارف کوحاصل ہوجائے گی

انٹر نیٹ کی دنیا میں سب سے زیادہ پڑھے جانے والے مضا مین
loading...